Home / شعرو نغم (page 3)

شعرو نغم

مضطرب کیوں تو۔۔۔؟

مضطرب کیوں تو۔۔۔؟ مضطرب کیوں تو زمانے میں نظر آتا ہے ہر گھڑی رونے رُلانے میں نظر آتا ہے عقل پر پڑگیا آکرتری کیسا پردہ رات دن پینے پلانے میں نظر آتا ہے میکدہ اور صنم خانہ ہے مسکن تیرا ...

Read More »

تکتی نگاہیں۔۔۔ مغربی تہذیب اور وہاں کے کلچر سے تو مجھے اوائل عمری سے ہی نفرت تھی۔ مغربیت سے بیزاری کا پہلو میری زندگی کے ہرشعبے میں نمایاں دکھائی دیتا تھا۔ حتی کہ میں اپنی ملازمت کے ڈریس یعنی کوٹ ...

Read More »

غزل

ہوامغرب سے کچھ ایسی چلی آہستہ آہستہ متاع دین ودانش لٹ گئی آہستہ آہستہ تمنا یہ ہے صبح زندگی سے پیار اب کرلوں یہ شمع زندگی بجھنے لگی آہستہ آہستہ اندھیرے دھیرے دھیرے جہل کے روپوش ہوتے ہیں بڑھاتی ہے ...

Read More »

والدہ مرحومہ کی یاد میں

گئی ہو کیا کہ زمانے کی سب خوشی بھی گئی خدا شناس نگاہوں کی برہمی بھی گئی بجھا بجھا سا دیا ہے ہماری دنیا کا شریر بچوں کی شیطانیاں، ہنسی بھی گئی تلاش کرتی ہے آنگن میں ہر نظر تجھ ...

Read More »

اوروں کا تعصّب اور عوام کی حالت حقیقتاََ ایک شخص جو اسلام کی تعلیم اور دنیا کے حالات سے واقف ہو، حیرت میں رہ جاتا ہے کہ روشنی ہونے پر بھی دنیا اس کا اعتراف نہیں کرتی۔ اس زمانے میں ...

Read More »

فلسطین

اے مورّخ ترے ہاتھ سے چھوٹ کر دیکھ قدموں میں تیرے قلم گرگیا جابجا روشنائی بکھر سی گئی جیسے چھینٹے لہو کے ہوں پھیلے ہوئے وہ لہو سر زمینِ فلسطیں جسے اپنے آغوش میں جذب کرتی رہی وہ لہو آسمانِ ...

Read More »

اقتباس اختلاف کو برداشت کرنا، اختلاف رائے اور تنقید سے تعلق میں فرق نہ آنے دینا، تنقید کو حلم وتحمل اور فراخ دلی وعالی حوصلگی کے ساتھ سننا، اچھی بات کو قبول کرنا، غلط بات کو نظرانداز کردینا۔ اپنی غلطی ...

Read More »

غزل

جاتے ہو کہاں میں نے یہ پوچھا تو نہیں ہے اک حرفِ دعا نکلا ہے، ٹوکا تو نہیں ہے دشمن سے ملوں، اپنی کہوں، اس کی سنوں بھی اے گردش ایام، یہ سوچا تو نہیں ہے اس دھوپ کی شدت ...

Read More »

ٓٓٓٓآدمی قرآن کی روح سے پوری طرح آشنا نہیں ہونے پاتا جب تک کے وہ عملََا وہ کام نہ کرے جس کے لئے قرآن آیا ہے ۔یہ محض نظریات اور خیالات کی کتاب نہیں ہے کہ آپ آرام کرسی پربیٹھ ...

Read More »